نواز شریف کو جیل نہیں جانے دیں گے، جاوید لطیف کا دو ٹوک پیغام

ہم نواز شریف کا ایسا استقبال کریں گے کہ سب دیکھیں گے: رہنما مسلم لیگ ن۔ فوٹو فائل
ہم نواز شریف کا ایسا استقبال کریں گے کہ سب دیکھیں گے: رہنما مسلم لیگ ن۔ فوٹو فائل

مسلم لیگ ن کے مرکزی رہنما اور وفاقی وزیر میاں جاوید لطیف کا کہنا ہے ایک بات یاد رکھیں پارٹی قائد میاں نواز شریف کو جیل نہیں جانے دیں گے۔

لاہور میں پریس کانفرنس کرتے ہوئے مسلم لیگ ن کے رہنما میاں جاوید لطیف کا کہنا تھا عمران خان جیسے کردار مختلف ادوار میں اپنا کردار ادا کرتے رہے ہیں، پاکستان بنانے والوں کو غدار قرار دیا گیا، پاکستان کے اندھیرے دور کرنے والے کو ہائی جیکر بنا دیا گیا۔

انہوں نے کہا کہ قائد ملت لیاقت علی خان کو گولی لگی لیکن آج تک کچھ معلوم نہیں ہوا، مادر ملت محترمہ فاطمہ جناح کو غدار کہا گیا، ایوب خان مادر ملت کا الیکشن چرا کر اقتدار پر قابض ہوئے، نواز شریف کو ہائی جیکر بنا کر سزا دی گئی، پوری دنیا نے بعد میں مانا کہ ہائی جیکنگ کا الزام غلط تھا۔

چیئرمین پاکستان تحریک انصاف کو تنقید کا نشانہ بناتے ہوئے جاوید لطیف نے کہا کہ عمران خان کے کردار کے حوالے سے غیر ملکی عدالت کا فیصلہ آچکا ہے۔

جاوید لطیف نے پوچھا کہ غیر ملکی کمپنیوں نے عمران خان کو فنڈنگ کیوں کی؟ اسپتال کو دیے جانے والے پیسے پی ٹی آئی کے اکاؤنٹ میں ٹرانسفر کیسے ہو گئے؟ الیکشن کمیشن کا فیصلہ آنے کے باوجود ایک طبقہ جلسوں کی کال دے رہا ہے، آج روپتہ بہتر ہو رہا ہے تو یہ احتجاج کی کال دے رہے ہیں۔

ان کا کہنا تھا ایک شخص کو صادق اور امین کا سرٹیفکیٹ دے دیا گیا، یہ اکیلا مجرم نہیں ہے اس کے ساتھ ثاقب نثار مرکزی کردار ہے۔

وفاقی وزیر نے کہا کہ ن لیگ ہمیشہ سے عدلیہ کا احترام کرنے والوں میں سے ہے، کچھ دروازے اور شیشے ٹوٹے تو کہا گیا کہ عدلیہ پر حملہ ہو گیا، ہمارے خلاف ایف آئی آرز کاٹی گئیں۔

جاوید لطیف کا کہنا تھا ایک بات یاد رکھیں کہ ہم نواز شریف کو جیل میں نہیں جانے دیں گے، نواز شریف کا وطن واپسی پر ایسا استقبال کریں گے کہ سب دیکھیں گے، ریاستی ادارے آئین کے مطابق کام کریں گے تو ملک مشکلات سے نکل سکےگا۔