بھارت میں کانگریس رہنما، خاتون ملازمہ سے جنسی ہراسگی پر گرفتار

پولیس نے خاتون کو جنسی استحصال کا نشانہ بنانے پر کانگریس لیڈر کو حراست میں لے لیا، فوٹو: فائل

پولیس نے خاتون کو جنسی استحصال کا نشانہ بنانے پر کانگریس لیڈر کو حراست میں لے لیا، فوٹو: فائل

بنگلور: بھارتی ریاست کرناٹک کے کانگریس رہنما منوج کرجاگی کو اپنے سیلون میں خاتون بیوٹیشنر کو جنسی ہراسگی پر نہ صرف مار کھانا پڑی بلکہ پولیس نے نیتا کو حوالات کی ہوا بھی کھلادی۔

بھارتی میڈیا کے مطابق کرناٹک کے ضلع دھرواد کے پولیس اسٹیشن میں بیوٹیشنر خاتون نے کانگریس لیڈر کے خلاف جنسی استحصال کی شکایت درج کرائی جس پر پولیس نے منوج کرجاگی کو حراست میں لے لیا۔

خاتون نے اپنی شکایت میں کہا کہ میں کانگریس لیڈر کے سیلون میں بطور بیوٹیشنر کام کرتی ہوں۔ گزشتہ روز وہ سیلون آئے اور مجھ سے زبردستی کرنے لگے۔

خاتون کے مطابق اس دوران انھوں نے مدد کے لیے اپنے بوائے فرینڈ کو فون کیا جو اپنے دیگر ساتھیوں کے ساتھ آیا اور منوج کی پٹائی کی اور تھانے جاکر رپورٹ لکھوانے کا مشورہ دیا۔

پولیس نے کانگریس رہنما کو جنسی ہراسگی کے الزام میں حراست میں لیکر عدالت میں پیش کیا جہاں سے جیل منتقل کردیا گیا۔

 

(function(d, s, id){
var js, fjs = d.getElementsByTagName(s)[0];
if (d.getElementById(id)) {return;}
js = d.createElement(s); js.id = id;
js.src = "https://connect.facebook.net/en_US/sdk.js#xfbml=1&version=v2.3&appId=770767426360150”;
fjs.parentNode.insertBefore(js, fjs);
}(document, ‘script’, ‘facebook-jssdk’));
(function(d, s, id) {
var js, fjs = d.getElementsByTagName(s)[0];
if (d.getElementById(id)) return;
js = d.createElement(s); js.id = id;
js.src = "https://connect.facebook.net/en_GB/sdk.js#xfbml=1&version=v2.7”;
fjs.parentNode.insertBefore(js, fjs);
}(document, ‘script’, ‘facebook-jssdk’));