امریکی ریاست نیو میکسیکو میں4 مسلمانوں کے قتل کی مبینہ وجہ سامنے آگئی

فوٹو: امریکی میڈیا

فوٹو: امریکی میڈیا

امریکی ریاست نیومیکسیکو میں چار مسلمانوں کے قتل کی مبینہ وجہ سامنے آگئی۔

غیر ملکی میڈیا کے مطابق  پولیس کا کہنا ہےکہ اس نے 2 افراد کے قتل میں مطلوب ملزم 51 سالہ محمد سید کو گرفتار کر لیا ہے، پولیس نے ملزم پر دیگر دو مسلمانوں کو قتل کرنے کا شبہ ظاہرکیا ہے۔

پولیس کا کہنا ہےکہ ملزم کےگھر  پر چھاپے میں شواہد بھی برآمد کر لیے ، ملزم کی گرفتاری  مسلم کمیونٹی کی مدد سےکی گئی، محمد سید پر 2 پاکستانیوں اور 2 افغانوں کو قتل کرنےکا الزام ہے۔

پولیس کا کہنا ہےکہ قتل کے چاروں واقعات کا آپس میں ممکنہ تعلق ہے۔

نیو میکسیکو کے اسلامک سینٹرکے صدر نے دعویٰ کیا ہےکہ ملزم کا اپنی بیٹی کی پسند کی شادی کرنے پرمقتولین سے تنازع تھا، تین مقتولین ان ہی کی مسجد میں آتے تھے۔

دوسری جانب پولیس نے شادی پر جھگڑے کو قتل کا واحد محرک قرار دینا قبل از وقت قرار دے دیا، دیگر پہلوؤں پر بھی تفتیش جاری ہے۔