اسمگلرز سے پکڑی گئی 200 کلو بھنگ چوہے کھا گئے، پولیس کا الزام

فوٹو:فائل

فوٹو:فائل

بھارت میں ایک دلچسپ واقعہ پیش آیا جہاں پولیس نے الزام لگایا ہے کہ  اسمگلرز سے پکڑی گئی 200 کلو بھنگ چوہے کھا گئے۔

برطانوی نشریاتی ادارے بی بی سی کے مطابق بھارتی ریاست اترپردیش کے شہر ماتھورا میں پولیس نے اسمگلرز سے پکڑ کر تھانوں میں رکھی گئی تقریباً 200 کلو گرام بھنگ کھانے کا الزام چوہوں پر لگا دیا۔

حال ہی میں ریاست اتر پردیش کی ایک عدالت نے پولیس سے کہا تھا کہ وہ منشیات کی اسمگلنگ کے کیس میں ثبوت کے طور پر پکڑی گئی منشیات عدالت میں پیش کریں۔

عدالت کے جج سنجے چوہدری  نے ایک حکم میں کہا کہ جب عدالت نے پولیس سے ضبط شدہ منشیات کو ثبوت کے طور پر پیش کرنے کو کہا تو بتایا گیا کہ چوہوں نے 195 کلو گرام بھنگ کھا کر ختم کردی۔ 

اس کے علاوہ ایک اور کیس میں بھی جس میں 386 کلو گرام منشیات پکڑی گئی تھی،جب عدالت میں پیش کرنے کا حکم دیا گیا تو پولیس نے رپورٹ درج کرائی کہ یہ بھنگ بھی مبینہ طور پر چوہوں نے کھا لی۔

جج سنجے چوہدری نے کہا کہ پولیس کے پاس اس معاملے سے نمٹنے کے لیے کوئی مہارت نہیں ہے کیونکہ چوہے چھوٹے جانور ہیں اور انہیں پولیس کا کوئی خوف نہیں ہوتا۔

انہوں نے مزید کہا کہ ضبط شدہ منشیات کو  ایسے بے خوف چوہوں سے بچانے کا واحد طریقہ یہ تھا کہ اسے  ریسرچ لیبز اور میڈیسن فرمز کو  فروخت کردیا جاتا اور حاصل ہونے والی رقم حکومت کو دی جاتی۔

اس کے علاوہ ماتھورا  کے ایک سینیئر پولیس اہلکار  نے صحافیوں کو بتایا کہ ان کے آس پاس کے تھانوں میں ضبط کردہ کچھ منشیات تیز بارش کی وجہ سے خراب ہوئی چوہوں کا  ان میں کوئی قصور نہیں ہے۔